عورت کی ایک چیز پکڑ کے دبا دو وہ تمہاری عاشق ہو جاۓ گی

عورت کی ایک چیز

س ی ک س ایک نہایت ہی سنجیدہ عمل ہے۔۔۔ میاں بیوی میں سیکس کی شروعات ہمیشہ ہنسی مذاق سے ہوتی ہے کرنی بھی ایسے ہی چاہیے۔۔ پھر مرد کی مرضی ہے چاہے بانہوں میں بھینچ کر شروع کرے سینہ دبا کر شروع کرے یا لب چومنے چوسنے سے۔۔ پہلے چند منٹ کپڑوں سمیت جسم پہ ہاتھ پھیرتےسینہ دباتے چھوڑتے پھر دباتے گزر جاتے ہیں۔۔۔

اور یہ سارا عمل ہنسی مذاق اور ہلکے پھلکے زہن کے ساتھ ہو رہا ہوتا ہے پھر عورت کی قمیض اترنے کا عمل شروع ہوتا جو کہ مرد کے لیے کافی سحر انگیز ہوتا ہے۔۔۔۔عورت کا جسم قمیض سے آزاد ہوتے ہی مرد پر سنجیدگی طاری ہونا شروع ہو جاتی ہیں۔۔۔۔۔اور اس کا جنسی ہیجان انگڑائیاں لینا شروع کردیتاہے ۔۔۔۔۔ پہلا مرحلہ کسنگ ہے مرد اپنے ہونٹ جیسے ہی عورت کے ہونٹوں پہ رکھ کر انھیں چوسنے لگتا ہے ۔۔۔۔۔چند لمحوں بعد ہی عورت بھی سنجیدہ ہوتی چلی جاتی ہے۔۔جو کہ دراصل جنسی کیفیت کے زون میں داخلے کا پہلا مرحلہ ہوتا ہے اور یہی سے سیکس کی اصل شروعات ہوتی ہے کسنگ کریں جیسے دل کریں ویسے کریں ۔۔۔ایک دوسرے کی زبان چوسنا بھی ایک پُرجوش عمل ہے ۔۔۔۔اس سے جنسی جذبات کو ایکدم بوسٹ ملتا ہے ۔۔اور دونوں کے جنسی جذبات کہیں سے کہیں پہنچ جاتے ہیں۔۔۔

اس کے بعد گردن چومنا ہلکا سا ہونٹوں سے گردن پر ربنگ کرناعورت کو از حد پسند ہے اور دنیا کی کوئی عورت گردن اور کانوں پر مرد کے ہونٹوں کی ربنگ برداشت نہیں کر سکتی۔۔۔ دوسرا نمبر پستانوں کا ہے پستان جنہیں دیکھ کر ہی مرد ہوش سے بیگانہ ہو جاتا ہے اسے پر مختلف طریقے سے پہلے ہلکا ہاتھ پھیرنا اسے دبانا بھیچنا مسلنا مرد کی ساری رگوں کو کھول کر خون کی گردش بڑھا دیتا ہے اگلا مرحلہ انھیں چومنے ان پر زبان پھیرنے کا ہے۔۔ ہم یہاں عورت کی شرمگاہ چومنے کی بات نہیں کرتے لیکن اس کے بعد اگر عورت کو فور پلے کے عمل میں جو لطف ملتا ہے تو وہ پستان چوسوانے سے ملتا ہے بعض خواتین تو پستان چوسنے کے دوران ہی انزال کر جاتی ہیں۔۔ نپل منہ میں لیجیے اور پورے جوش کے ساتھ ان کو چوسیے جتنا چوس سکتے ہو چوسیے ۔۔۔ نپل کے گرد بنے رنگ پر زبان پھیرنا عورت کو کرنٹ کے جھٹکےلگوا دیتا ہے۔۔۔۔۔۔

حسرت سے چوسیے ہلکا سا کاٹیے چوستے کاٹتے وقت عورت کے منہ سے نکلنے والی لذت بھری سسکاریاں آہ۔۔۔۔آہہہ۔۔۔آہ۔۔۔۔۔ آپکے جنسی ہیجان کو عروج پر لے جائیں گی۔۔۔ اور مرد اس وقت اپنے کنٹرول کھو دیتا ہے اور اس کا دل کرتا ہے کہ بس اب ڈال دوں۔۔۔۔لیکن ٹھہریے ابھی عورت اس وقت جنسی زون میں ضرور ہوتی ہے لیکن اس کو ابھی مزید فور پلے کی ضرورت ہے۔۔۔۔ اب آگے بڑھیے۔۔۔۔عورت کو الٹا لٹائیے ۔۔۔اس کے اوپر لیٹ کر اس کی گردن کی سائیڈوں سے چومنا شروع کیجیے کانوں پر ہلکی سی زبان پھریے۔۔۔۔۔کاندھوں کی اونچائیوں کو چومیے انھیے کاٹیے اس عمل سے عورت تڑپ اٹھے گی۔۔ پھر کمر کو چومیے کمر کی سائیڈوں کو چومیے اس پر زبان پھیریے۔۔۔۔۔ اس کے بعد گردن سے لیکر کمر سے ہوتے ہوئے کولہوں تک ہاتھ پھیریے۔۔۔عورت کے کولہے بڑھے حساس ہوتے ہیں ان پر مرد کا ہاتھ پھرنا عورت کو لطف دیتا ہے۔۔

اگر میاں بیوی کا آپس میں بہت اچھا سیکس ریلیشن ہے تو پھر کولہوں پر ہلکے ہلکے تھپٹر ماریے تھپٹر کی شدت بڑھاتے جائیں اس سے نکلنے والی خاص مدھر آوازیں آپ کو کائنات کی دوسری کسی اور چیز میں نہیں ملیں گی۔۔۔وہ شہوت انگیز آوازیں سن کر مرد کے رہے سہے ہوش بھی ختم ہو جاتے ہیں۔۔۔۔اور وہ مکمل جنسی ہیجان کی اتھاہ گہرائیوں میں ڈوب جاتا ہے۔۔ ادھر عورت بھی انزال سے پہلے حاصل ہونے والی بے خودی میں کھو جاتی ہے پھر بیوی کو سیدھا کیجیے ۔۔۔سینے پہ ہاتھ پھیرتے ہوئے پیٹ اور ناف سے نیچے تک آ جائیے۔۔۔ اب آپ بیوی کی رانوں پر منہ رکھ کر لیٹ جائیے۔۔ اگر ہو سکے تو اپنا من پسند پرفیوم یا باڈی سپرے عورت کی رانوں کے اوپر اور اندرونی سائیڈ پر چھڑک لیں۔۔۔ اس کے بعد رانوں کو سونگھیے ۔۔۔۔اگر ہمبستری کرنے سے پہلے بیوی نہا لے تو بہت ہی اچھا ہے ۔۔۔۔۔ عورت کی گوری گداز رانوں کو سونگھنا دنیا کے تمام نشوں سے زیادہ خمار پیدا کرتا ہے ۔۔۔۔۔

ناک رانوں پہ رکھ کر زور سے کوکینیوں کی طرح سانس کھینچیے ۔۔۔۔۔۔کوکین کی دس لائنوں سے زیادہ خمار حاصل ہوگا۔۔۔ شرمگاہ سے چند انچ کے فاصلے تک رانوں کو چومیے ان پر زبان پھیریے۔۔۔۔اس دوران دیکھنا عورت اچھل رہی ہوگی اور آپکے سر پر ہاتھ رکھے گی۔۔۔۔اس میں ایک عجیب سی تڑپ پیدا ہوگی جو اس کو خود بھی معلوم نہیں ہوتی۔۔۔ اب عورت کی شرمگاہ کو ہاتھوں سے سہلائیے ۔۔بظر کو انگلی سے چھیڑیے ہلکی ہلکی ربنگ کریے۔۔۔ یاد رکھیے عورت اپنی شرمگاہ پر ہاتھ سب سے آخر میں لگوانا پسند کرتی ہے ۔۔کیوں کہ اس کے بظر کوچھیڑنے کے بعد عورت پھر دخول چاہتی ہے۔۔ یہاں اب رک جائیے۔۔۔۔۔بعض لوگ اس سے آگے بھی بڑھتے ہیں کچھ لوگ صرف شرمگاہ چومتے ہیں اور بعض لوگ اسے چاٹتے بھی ہیں

اپنی رائے کا اظہار کریں